چور کو پکڑیے

مارچ 1, 2007 at 2:35 صبح 4 comments

یونیکوڈ متعارف ہونے سے پہلے اردو ویب سائیٹیں تصویری (gif) مواد پر مشتمل ہوتی تھیں اور اب بھی اردو ویب سائیٹوں کی اکثریت اردو مواد کو تصاویر کی صورت میں پیش کرتی ہے ۔ یونیکوڈ متعارف ہونے کے بعد جوں جوں اس کی افادیت واضح ہوتی جا رہی ہے ، توں توں یونیکوڈ میں اردو مواد بھی بڑھتا جا رہا ہے ۔

تصویری اردو کا ایک فائدہ یہ ہے کہ آپ اردو عبارت کے پسِ منظر میں اپنی سائیٹ کا ایڈریس یا کاپی رائیٹ کی معلومات فراہم کر سکتے ہیں ، یوں اگر کوئی آپ کے مواد کو چوری کرتا ہے تو آپ کو بھی کریڈٹ ملتا ہے ۔ لیکن چونکہ یونیکوڈ میں عبارتی (Text) شکل میں تحریریں شائع کی جاتی ہیں اس لیے اسے آسانی سے چوری کیا جاسکتا ہے ۔ آپ کی "خون پسینے” کی محنت آرام سے دوسری ویب سائیٹوں پر استعمال ہوتی رہتی ہے اور آپ کو پتہ بھی نہیں چلتا کہ کون کون آپ کی تحریروں کو اپنے نام سے شائع کر رہا ہے ۔

اپنے مواد کی چوری کے بارے میں کوئی قدم اٹھانے سے پہلے ضروری ہے کہ آپ کو معلوم ہو کہ کون کون آپ کی تحریریں چوری کر رہا ہے ۔ چور کو پکڑنے کے لیے ایک ویب سائیٹ CopyScape مفت خدمت فراہم کر رہی ہے ۔ اس ویب سائیٹ کے صفحہِ اول پر جاکر دیے گئے خانے میں اپنے بلاگ یا ویب سائیٹ کا ایڈریس لکھیے ۔ ان کا خود کار نظام انٹرنیٹ کی چھان بین کر کے آپ کو بتا دے گا کہ آپ کی تحریریں چوری ہو رہی ہیں یا نہیں ۔ ایک مخصوص رقم ادا کر کے آپ مزید خدمات بھی حاصل کر سکتے ہیں ۔

Advertisements

Entry filed under: Links مفید روابط.

دماغ کا کنٹرول رینکنگ بڑھائیے

4 تبصرے Add your own

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

Trackback this post  |  Subscribe to the comments via RSS Feed


Moved

یہ ویب سائیٹ درج ذیل جگہ پر منتقل کر دی گئی ہے http://urdutechnews.tuzk.net

تازہ ترین

مسکرائیے

ماہر: F8 دبائیے !
صارف: کیا F اور 8 ایک ساتھ دبا دوں؟

Feeds

صارفین کی تعداد

  • 12,409 unique visits since 27-02-2007

%d bloggers like this: